Sharab aur Nasheeli Ashya ke istemaal se shehriyo ki ausat umar Ghatt rahi hai : Dr Ashgar Chulbul

شراب اور نشیلی اشیاء کے استعمال سے شہریوں کی عمر کا اوسط گھٹ رہا ہے : ڈاکٹر اصغر چلبل 

گلبرگہ 10مارچ : رنگ مندر گلبرگہ میں 10مارچ کوشراب اور نشہ آور اشیاء سے متعلق عوامی بیداری پروگرام کا افتتاح کرتے ہوئے ڈاکٹر محمد اصغر چلبل نے کہا کہ شراب اور نشیلی اشیاء کے استعمال سے آج ساری دنیا تو پریشانہے لیکن بھارت دیش پر بھی اس کے بہت مضر اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔آج ہندوستان کے شہریوں کی عمر کا جواوسط 60سال ہے اور اب جو نئی نئی دوائیں ایجاد ہوئی ہیں ان کے سبب عمر کے اس اوسط میں مزید5سال کا اضافہ ہوا ہے ایسی بھی رپورٹیں مل رہی ہیں ۔ لیکن نوجوان نشیلی چیزوں میں گرفتار ہوکر اس اوسط کو خود اپنے ہاتھوں سے گھٹا رہے ہیں۔ اس کے علاوہ ملک بھر میں جو روز روز کے جرائم کے واقعات ہورہے ہیں ان کا سبب بھی یہی شراب نوشی اور نشیلی اشیاء کے استعمال کا اثر ہے ۔ان انشیلی اشیاء کے استعمال سے انسان کا دماغی توازن کھوجاتا ہے اور وہ جرم کر بیٹھتا ہے۔

ڈاکٹر اصغر چلبل نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ یہی سلسلہ اگر جاری رہا تو جونئی نسل ہے اس کا پچاس سال کی عمر تک بھی پہنچنا مشکل نظر آرہا ہے۔ یہ ملک کے لئے بہت ہی تشویش ناک بات ہے۔ انھوں نے کرناٹک شراب و نشیلی اشیاء کے بورڈ اور ضلعی انتظامیہ و ڈاکٹر بابا صاحب امبیڈکر یواجنا و گگرامین ابھی وردھی سمیتی ،محکمہ پولیس ،محکمہ صحت ، محکمہ آبکاری و محکمہ بہبودی خواتین و اطفال کی جانب سے مذکورہ بالا پروگرام منعقد کرنے پر ان محکموں کے ذمہ داران کو مبارک باد پیش کی ۔ انھوں نے کہا کہ آج نئے نئے عنوانات کو لے کر کئی ایک پروگرام منعقد کے جاتے ہیں لیکن ایسے اہم مسئلہ پر بہت کم توجہ دی گئی ہے کیوں کہ اس کا راست تعلقہ انسانی صحت سے جڑا ہوا ہے۔ اس لئے کہ انسان کی زندگی اور صحت اگر اچھی رہے گی تو ہندوستان بھی خوش حال رہے گا ۔

انھوں نے مزید کہا کہ نشہ آور چیزوں کے استعمال سے معاشرہ پر بھی نہایت برے اثرامرتب ہورہے ہیں جس کی وجہ سے خواتین زیادہ متاثر ہورہی ہیں ۔ کیوں کہ وہ اپنے شوہر اور اپنی اولاد کی تباہی دیکھ کر کافی فکر مند ہیں ۔انھوں نے کہا کہ آج کے اس پروگرام میں خواتین کی کثیر تعداد کی شرکت اس بات کا ثبوت ہے کہخواتین مردوں کی شراب نوشی و نشہ کی عادتوں سے سخت پریشان ہیں ۔ خواتین اس بات کے لئے فکر مند بھی ہیں کہ کس طرح اپنے شوہروں اور بچوں کو اس خطرناک عادت سے چھٹکارا دلایا جائے ۔ ڈاکٹر محمد اصغر چلبل نے مزید کہا کہ وہ آج جی ڈی اے چیرمین کے عہدہ پر اپنی خدمات انجام دے رہے ہیں لیکن کل نہیں رہیں گے ۔ لیکن وہ ابتداء ہی سے سماجی فلاح و بہبود کے لئے کام کرتے رہے ہیں اور مستقبل میں بھی انشا ء اللہ اپنی خدمات انجام دیتے رہیں گے ۔اس موقع پر ڈاکٹر اصغر چلبل نے ریاستی حکومت او ر مرکزی حکومت سے پر زور اپیل کی کہ وہ شراب نوشی اور نشہ آور اشیاء پر فوری پابندی عائد کرے ۔

انھوں نے کہاکہ عوامی بیداری پیدا کرنے والے اس طرح کے جلسوں کے انعقاد کی شہر میں مزید ضرورت ہے۔ انھوں تیقن دیا کہ وہ اس لڑائی میں بھر پور تعاون کریں گے ۔
اجلاس کی صدارت محترمہ سورنا ہنومنت مالا جی صدر ضلع پنچایت گلبرگہ نے کی ۔ مہمان خصوصی ایچ سی ردرپا صدر نشین شراب نوشی و نشیلی اشیا بورڈبنگلور، ناگ راج شیٹئ ،ضلعی ڈائیریکٹر ، کے علاوہ منجو ناتھ اوناتھ ٹمکور، راج شیکھر ضلع ٹمکور نے بھی خطاب کیا ۔اجلاس میں ضلعی پولیس کے عہدہ داران بھی شریک تھے ۔

News By : Hakeem Shakir

Comments
Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestlinkedinmail

Leave a Reply

Facebook