MSK Mill me 2.4 crore ke fund se function Hall ki tameer, Dr Qamar ul islam aur Mallikarjun kharge ke hatho kaam ki shuruat

ڈاکٹر قمرالاسلام تعمیری ، ترقیاتی ،ذہن رکھنے والے غریب عوام کے حقیقی رہنما:کھرگے
گلبرگہ میں 5شادی خانوں کی تعمیر شاہ جیلان شادی محل کیلئے 2.30کروڑ منظور : قمرالاسلام

گلبرگہ25؍مارچ(کے بی این ٹی نیوز):بڑے نوٹوں کی منسوخی سے آج بھی ملک کی عوام بے حد پریشان ہے ،بڑے نوٹوں کی منسوخی کرنے کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی نے عوام کے ساتھ کئی ایک جھوٹے وعدے کئے ۔بجٹ میں بڑے نوٹوں کی منسوخی سے متعلق کچھ بھی ذکر نہیں کیا گیا۔ نریندر مودی اور امت شاہ نے ہندو اور مسلمانوں کو ایک دوسرے کا مخالف بناتے ہوئے اُتر پردیش میں سیکولر ووٹوں کی تقسیم کے ذریعہ اقتدار حاصل کیا اور آر ایس ایس کے تربیت یافتہ شخص کو وزیر اعلیٰ کی گدی پر بیٹھایا، ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر ملیکارجن کھرگے لیڈر کانگریس پارلیمانی پارٹی لوک سبھا و ایم پی گلبرگہ نے کیاہے ، وہ آج ایم ایس کے ملز میں جلسۂ سنگ بنیاد شاہ جیلان شادی محل سے خطاب کر رہے تھے ۔

قبل ازیں اُنہوں نے شمع افروزی کرتے ہوئے جلسہ سنگ بنیاد کا افتتاح انجام دیا جبکہ ڈاکٹر الحاج قمرالاسلام سابق وزیر و رکن اسمبلی گلبرگہ شمال نے شاہ جیلان شادی محل کا سنگ بنیاد رکھا اور تعمیری کام کا آغاز کیا۔ملیکارجن کھر گے نے ڈاکٹر الحاج قمرالاسلام کی قائدانہ صلاحیتوں اور عوامی خدمات کو زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ قمرالاسلام محض ایک سیاسی رہنما نہیں ہیں بلکہ وہ تعمیری، ترقیاتی ذہن رکھنے والے اور غریب عوام کے حقیقی رہنما و قائد ہیں ۔ ڈاکٹر قمرالاسلام نے ان علاقوں کی نشاندہی کرتے ہوئے جہاں غریب عوام رہائش پذیر ہیں ،ترقیاتی کام انجام دئیے ہیں۔یہ ان کا قابل ستائش اقدام ہے۔

ملیکارجن کھر گے نے مزید کہا کہ ڈاکٹر قمرالاسلام ہمیشہ عوام میں رہنے والے فعال ومتحرک رہنما ہیں اور ہمیشہ مسائل کو حل کرنے کے لیے جدوجہد کرتے رہتے ہیں۔ اگر قمرالاسلام کو کوئی مسئلہ پیش نہ ہو تووہ بے چین ہو اٹھتے ہیں۔ ملیکارجن کھر گے نے ایم ایس کے ملز علاقہ سے اپنی اٹوٹ وابستگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ1952سے اس علاقہ سے جڑے ہیں، یہاں انھوں نے مختلف تحریکوں سے خطاب کیا ہے۔اور ایم ایس کے ملز کے ملازمین کے مسائل کو حل کرنے اور ایم ایس کے ملز کو قائم رکھنے کے لیے بھی انھوں نے جدوجہد کی تھی ۔ملیکارجن کھر گے نے مزید کہا کہ جیلان آباد کا علاقہ آج گنجان اور ترقی یافتہ ہوچکا ہے لیکن پہلے یہ سلم کالونی کی طرح ہوا کرتا تھا۔اس علاقہ کی ترقی کے لیے قمرالاسلام صاحب نے کافی مساعی کی ہے۔

ڈاکٹر الحاج قمرالاسلام صاحب سابق وزیر و رکن اسمبلی گلبرگہ شمال نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ان کے دورِ وزارت میں گلبرگہ میں 5شادی محلوں کو منظوری دی گئی ،جن میں عملی محلہ کا محمد حیات شادی محل تعمیر ہوچکا ہے اور یہ ایک مثالی شادی محل بن گیا ہے ۔ڈاکٹر قمرالاسلام نے بتایا کہ انھوں نے مصباح نگر ، لوہار گلی کے علاوہ جین برادراری کے لیے ایک شادی محل کی منظوری کروائی ہے۔ انھوں نے مزید کہا کہ گلبرگہ میں 5شادی محلوں کی تعمیر اپنے آپ میں ایک ریکارڈہے۔الحاج قمرالاسلام نے ملک کے موجودہ حالات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اتر پردیش میں بی جے پی حکومت تشکیل پانے کے بعد مسلمانوں میں بے چینی اور تشویش پائی جارہی ہے، لیکن مسلمانوں کا اللہ کی ذات اور آخرت پر ایمان ہوتا ہے اسی لیے مسلمانوں کو حالات سے خوف کھانے کی ضرورت نہیں۔ اُنہوں نے ملیکارجن کھرگے کی خدمات کی ستائش کرتے ہوئے کہا کہ وہ آج ملک کی پارلیمنٹ میں فرقہ پرست حکومت کا ڈٹ کر مقابلہ کر رہے ہیں ۔ قمرالاسلام نے مزید کہا کہ اُنہوں نے ایم ایس کے ملز و جیلان آبادمیں کئی ایک اہم سڑکوں کی تعمیر و دیگر ترقیاتی کاموں کو انجام دیا ہے ۔

درگاہ حضرت شاہ جیلانی ؒ کے لئے کوئی آمدنی کا ذریعہ نہیں تھا۔ درگاہ کمیٹی کے ذمہ داران نے جب ان سے ملاقات کرتے ہوئے اس بارے میں گفتگو کی تو اُنہوں نے درگاہ شریف کی مالی حالت کو بہتر بنانے کی غرض سے45لاکھ روپئے منظور کروائے اور ایک کمان کی تعمیر بھی کروائی ۔ انہوں نے مزید کہا کہ شاہ جیلان شادی محل اس علاقہ میں غریب و نادار خاندانوں کی شادیوں کے لیے نہایت ضروری ہے۔ اس شادی محل کا جملہ تخمینہ2.30کروڑ ہے اور حکومت کرناٹک کی جانب سے ایک کروڑ کی گرانٹ منظور ہوئی ہے ۔ 50لاکھ روپئے پہلی قسط جاری ہوچکی ہے ۔درکار تخمینہ کی تکمیل کے لیے وہ مناسب وسائل تلاش کریں گے۔

جلسہ سنگ بنیاد شاہ جیلان شادی محل کی صدارت حضرت سید شاہ ہدایت اللہ صاحب قادری سجادہ نشین درگاہ حضرت سید شاہ ہدایت اللہ بادشاہ قادری ؒ عملی محلہ نے فرمائی۔

ڈاکٹر محمد اصغر چلبل سابق چیرمین کے یوڈی اے نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آج ہمارا ملک بہت زیادہ نازک حالات سے گذر رہا ہے ۔ فرقہ پرست طاقتیں مسلسل اپنے ناپاک ارادوں میں کامیاب ہورہی ہیں ۔ ملک بھر میں فرقہ وارانہ ماحول کو پیدا کرنے کی منصوبہ بند سازش کی جارہی ہے ۔ان نازک حالات میں اشد ضروری ہے کہ ہمیں اپنے اختلافات کو پس پشت ڈالتے ہوئے آپس میں مل جل کر اپنے معاملات کو حل کریں۔ ورنہ یہ ملک فرقہ پرستوں کے حوالے ہو جائیگااور تاریخ ہمیں معاف نہیں کرے گی۔ڈاکٹر اصغرچلبل نے ملیکارجن کھرگے و قمرالاسلام صاحب کی مثالی خدمات کوزبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ ان دونوں قائدین نے مل کرنہ صرف ضلع گلبرگہ بلکہ علاقہ حیدرآباد کرناٹک کی ہمہ جہت ترقی کے لیے انتھک جدوجہد کی ہے۔

ڈاکٹر اصغرچلبل نے گلبرگہ کے عوام کی جانب سے ڈاکٹر ملیکارجن کھرگے کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ان کی نمائندگی پر ایچ کے آر ڈی بی کو اس سال بجٹ میں 1500کروڑ روپئے منظور ہوئے ہیں اور شہر گلبرگہ کیلئے آؤٹر رنگ روڈ (Outer Ring Road) کاDRPتیار ہوا ہے ۔ جس کی لاگت1500کروڑ روپئے ہے ۔ اور تقریباً700تا750ایکر اراضی آؤٹر رنگ روڈ کی تعمیر کے لیے استعمال میں آئے گی۔ ۔

الحاج اقبال احمد سرڈگی رکن کرناٹک قانون ساز کونسل، الیاس سیٹھ باغبان چیرمین این ای کے آر ٹی سی ، مئیر گلبرگہ سید احمدنے مہمانان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی۔اس موقع پر ریجنل کمشنر آدتیہ املن بسواس، کمشنر سٹی کارپوریشن گلبرگہ پی سنیل کمار، محبوب پاشاہ ضلعی اقلیتی بہبود آفیسر، شفیق احمد ہنڈیکارسابق کارپوریٹر ،عادل سلیمان سیٹھ، عبدالرحیم نظامی، حنیف خلیفہ ، ذاکر بڑے بھائی، شیخ شبیر، عابد حسین اکھاڑا، خواجہ معین ، محمد غوث، عبدالرشید، عباس علی، مہتاب علی، محمد سلیم ، منیر احمد کھاڑہ ، اشفاق احمد انعامدار موجود تھے۔شیخ یونس علی سابق کارپوریٹر و اسلم باجے نے تفصیلی رپورٹ پیش کی۔ شیخ حسین بابا سابق ڈپٹی مئیر نے نظامت کے فرائض بحسن و خوبی انجام دئیے۔

Comments
Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestlinkedinmail

Leave a Reply

Facebook